محسن انسانیت ﷺکی شان میں گستاخی سے عالم اسلام میں ایک اضطراب ہے،سراج الحق

محسن انسانیت ﷺکی شان میں گستاخی سے عالم اسلام میں ایک اضطراب ہے، ایک ارب سے زائدکلمہ گو پریشان اور سراپا احتجاج ہیں ۔حالات کا تقاضہ ہے کہ دنیا کو جنگ و جدل سے بچانے اور پر امن دنیا کی تعمیر کے لیے اقوام متحدہ ایسا قانون بنائے جس میں تمام انبیاءاور مذہبی شخصیات کو احترام اور تقدس حاصل ہو اورانؑ کی توہین کو جرم قرار دیا جائے ۔سراج الحق

Siraj Saab  17-01-2015

لاہور۔۔۔۔۔۔
    جماعت اسلامی پاکستان کے امیر سراج الحق نے کہا ہے کہ محسن انسانیت ﷺکی شان میں گستاخی سے عالم اسلام میں ایک اضطراب ہے، ایک ارب سے زائدکلمہ گو پریشان اور سراپا احتجاج ہیں ۔حالات کا تقاضہ ہے کہ دنیا کو جنگ و جدل سے بچانے اور پر امن دنیا کی تعمیر کے لیے اقوام متحدہ ایسا قانون بنائے جس میں تمام انبیاءاور مذہبی شخصیات کو احترام اور تقدس حاصل ہو اورانؑ کی توہین کو جرم قرار دیا جائے ۔ جماعت اسلامی کے مرکزی میڈیا سیل کے پریس ریلیز کے مطابق کراچی میں وفود سے گفتگو کرتے ہوئے سراج الحق کا کہنا تھا کہ یورپ کا ایک خاص طبقہ سیکولر ازم اور آزادی اظہار رائے کے نام پر نبیﷺ مہربان کی شان میں گستاخی کرتا چلا آرہا ہے اور یہ رویہ ناقابل برداشت ہے۔ مسلم حکمرانوں کو چاہیے تھا کہ وہ ایک ارب مسلمانوں کی نمائندگی کرتے ہوئے او آئی سی اورسلامتی کونسل کے اجلاس طلب کرتے اور یورپ کو احتجاج ریکارڈ کراتے ۔انہوں نے کہا کہ مسلم حکمرانوں کی خاموشی کی وجہ سے آج پوری دنیا میں مسلمان سراپا احتجاج ہیں ۔ نبیﷺ کی محبت اور عشق مسلمانوں کے دلوں میں ہے اگر فرانس اور یورپی ممالک کے اخبارات نے اپنا رویہ نہیں بدلا تو ہم اس کا جواب دینے کا حق محفوظ رکھتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ محسن انسانیت کی شان میں گستاخی برداشت نہیں کی جائے گی بار بار خاکوں کی اشاعت کا اعلان مسلمان کی غیرت کو چیلنج کرنا ہے اور ہم اس چیلنج کو قبول کرتے ہیں ہم انتہا پسند نہیں ہیں انتہا پسندی کا مظاہرہ یورپ نے کیا ہے سلمان رشدی اور بنگلہ دیش کی ملعون خاتون تسلےمہ نسرےن کو یورپ نے پناہ دی یہ بھی دہشت گردی اور انتہا پسندی ہے اسی لئے دنیا فساد کا مرکز بنتی ہے ۔ےورپ اور مغرب آخرمذہب کی توہےن کرنے والوں کو کےوں پناہ دےتے ہےں ؟انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی کراچی اسلام آباد اور لاہور میں آئندہ جمعہ کو ملین مارچ کرے گی اور یہ کسی ایک جماعت کا پروگرام نہیں بلکہ پورے پاکستان کا پروگرام ہے ۔یورپ نے 15لاکھ لوگ جمع کئے تو ہم بھی لاکھوں لوگ جمع کریں گے انہوں نے کہا کہ ہم یورپی یونین کے سفیروں اور جرمن چانسلر کوخطوط بھی لکھیں گے آزادی اظہار رائے کا حق سب کو حاصل ہے لیکن مذہب اور اسلامی شعائر کی توہین کی اجازت نہیں دی جاسکتی ۔ انہوں نے کراچی میں پرامن طلباءپر فائرنگ اور لاٹھی چارج کی مذمت کی اورکہا کہ سندھ حکومت نے پُر امن طلباءکے ساتھ ناروا سلوک اختےار کیا ہے اور پرامن احتجاج کوپُر تشدد بنانے اور طلباءکو تشدد پر اکسانے کی کوشش کی ہے ۔سراج الحق نے مظاہرے مےں پولےس فائرنگ اور تشدد کے نتےجے مےں صحافےوں اور طلباءکے زخمی ہونے پر افسوس کا اظہار کےا اور کہا کہ جماعت اسلامی صحافی اور طلباءبرادری کے ساتھ اظہار ےکجہتی کرتی ہے۔انہوں نے کہاکہ اللہ تعالیٰ زخمی صحافی اور طلباءکو جلد صحت ےابی عطا فرمائے ۔#
 

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s