سراج الحق کا مظفر آباد میں یکجہتی کشمیر کانفرنس سے خطاب

کشمیر کے بغیر پاکستان نامکمل ہے ،ہم کسی قیمت پر بھی کشمیر کی آزادی کے مطالبے سے دستبردار نہیں ہوسکتے ۔ جب تک کشمیر کا مسئلہ حل نہیں ہوتا بھارت سے دوستی نہیں ہوسکتی ۔ جماعت اسلامی کے زیر اہتمام یوم یکجہتی کشمیر منایا گیا ۔ سراج الحق کا مظفر آباد میں یکجہتی کشمیر کانفرنس سے خطاب

pic sirajul haq (2)

لاہور5فروری 2015
    یوم یکجہتی کشمیر پانچ فروری پوری دنیا سمیت ملک بھر میں جوش و جذبہ اور اس عزم کے ساتھ منایا گیا کہ جب تک کشمیر آزاد نہیں ہوجاتا کشمیری عوام کی سیاسی و اخلاقی مدد جاری رکھی جائے گی ۔جماعت اسلامی کی طرف سے پورے ملک میں کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کیلئے بڑی بڑی ریلیاں نکالی گئیں اور جلسے جلوس اور سیمینار ز منعقد کئے گئے جن میں ملک کے لاکھوں عوام نے شرکت کی ۔وفاقی دارلحکومت اسلام آباد سمیت چاروں صوبائی درالحکومتوں آزاد جموں و کشمیر ،گلگت بلتستان اور ملک بھر کے چھوٹے بڑے شہروں میں یوم یکجہتی پر پوری قوم سڑکوں پر نکل آئی ۔جماعت اسلامی پاکستان کے امیر سراج الحق نے پاکستان اور کشمیر کو ملانے والے کوہالہ پل پرکشمیری قیادت کے ساتھ ہاتھوں کی زنجیر بنائی ،مظفر آباد میںمرکزی ریلی کی قیادت کی اور عظیم الشان جلسہ عام سے خطاب کیا ۔نائب امیر جماعت اسلامی میاں محمد اسلم نے اسلام آباد ،حافظ محمد ادریس نے گوجرانوالا ،اسد اللہ بھٹو نے کوئٹہ، راشدنسیم نے سکھر سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کراچی ،ڈاکٹر فرید احمد پراچہ نے لاہور،ڈاکٹر سید وسیم اختر نے ملتان ،پروفیسر محمد ابراہیم اور صاحبزادہ طارق اللہ نے پشاور میں بڑی بڑی ریلیوں کے قیادت کی اور ریلیوں کے شرکاءسے خطاب کیا۔
    جماعت اسلامی کے مرکزی میڈیا سیل کے مطابق سراج الحق نے مظفر آباد میں بڑے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر کے بغیر پاکستان نامکمل ہے ،ہم کسی قیمت پر بھی کشمیر کی آزادی کے مطالبے سے دستبردار نہیں ہوسکتے ۔ جب تک کشمیر کا مسئلہ حل نہیں ہوتا بھارت سے دوستی نہیں ہوسکتی ۔انہوں نے کہاکہ امریکہ اور برطانیہ جو اس مسئلہ کے ذمہ دار ہیں انہیں اس کے حل کیلئے اقوام متحدہ کی قرار دادوں پر عمل درآمد کرواناچاہئے اور کشمیری عوام کو ان کا حق خود ارادیت لانا چاہئے ۔انہوں نے کہا کہ بھارت جان لے کہ وہ کشمیری عوام کے جذبہ آزادی کو شکست نہیں دے سکتا ،جب تک کشمیر آزاد نہیں ہوجاتا آزادی کی یہ جنگ جاری رہے گی ۔انہوں نے کہا کہ کشمیری عوام نے اپنی بے مثال جدوجہد سے شکست بھارت کے ماتھے پر لکھ دی ہے ،کشمیر بھارت کے قبضہ سے آزاد ہوکر رہے گااور آزادی کشمیریوں کا مقدر بنے گی۔ انہوں نے کہا کہ بانی پاکستان قائد اعظم نے کشمیر کو پاکستان کی شہ رگ قرار دیا تھا ،جب تک ہماری شہ رگ دشمن کے قبضہ میں ہے ہم امن و سکون کی زندگی نہیں گزار سکتے ،انہوں نے کہا کہ کشمیر پر بھارتی قبضہ پاکستان کی بقا اور سا لمیت کے لئے خطرہ ہے ۔انہوں نے کہاکہ امریکی صدر باراک اوبامانے اپنے دورہ بھارت کے موقع پر کشمیر پر بات نہ کرکے انصاف کا قتل عام کیا ۔انہوں نے کہا کہ اگر سکاٹ لینڈ ،مشرقی تیمور اور جنوبی سوڈان میں ریفرنڈم ہوسکتا ہے تو کشمیر میں کیوں نہیں ہوسکتا ۔سراج الحق نے کہا کہ بھارت نے آٹھ لاکھ فوج کے ذریعہ کشمیر پر قبضہ کررکھا ہے ،کشمیری عوام 70سال سے بھارت کے ظلم و جبر کا شکار ہیں ،لاکھوں نوجوانوں نے آزادی کیلئے شہادتیں دیں اور اپنا جوان خون اس تحریک آزادی کو پیش کیا ۔انہوں نے کہا کہ عالمی برادری کشمیری عوام سے کئے گئے اپنے وعدے پورے کرے ،بھارت کو سلامتی کونسل کی رکنیت کشمیر کی آزادی
سے مشروط ہونی چاہئے ،انہوں نے کہا کہ کشمیر اور پاکستان لازم ملزوم ہیں ۔انہوں نے کہا کہ کشمیر پر بھارت کا رویہ انتہا پسندانہ اور ظالمانہ ہے ،کشمیر کے مسئلہ پر پاکستانی حکمرانوں نے اپنی ذمہ داری پوری نہیں کی ۔
     جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی آزاد کشمیر عبدالرشید ترابی نے کشمیری قوم کی آزادی کیلئے جدوجہد کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر ی پاکستان کی بقا، سلامتی اور تکمیل کی جنگ لڑ رہے ہیں ،پاکستانی عوام کی طرح کا جوش حکمرانوں کے اندر ہوتا تو اب تک کشمیر آزاد ہوچکا ہوتا ،انہوں نے کہا کہ ہم کب تک کشمیر میں بہتے ہوئے لہو کو دیکھتے اور خاموش تماشائی بنے رہیں گے ۔حکمران کشمیر پر اپنی پالیسی کو واضح کریں اور دو ٹوک انداز میں بتائیں کہ کب تک بھارت کو سر پر بٹھانے اور کشمیریوں کے زخموں پر نمک پاشی کا شرمناک رویہ جاری رکھیں گے ۔جلسہ سے سابق امیر جماعت اسلامی قاضی حسین احمد ؒ کے بیٹے آصف لقمان قاضی و دیگر نے بھی خطاب کیا۔
    جماعت اسلامی لاہور کے زیر اہتمام ناصر باغ سے اسمبلی ہال تک کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے ریلی نکالی گئی جس میںشہریوں کی بہت بڑی تعداد نے شرکت کی ۔ ریلی میں ہزاروں خواتین اور بچے بھی شریک ہوئے۔ریلی کی قیادت ڈپٹی سیکرٹری جنرل جماعت اسلامی پاکستان ڈاکٹر فرید احمد پراچہ ، امیر جماعت اسلامی لاہور میاں مقصود احمد ، ڈائریکٹر امور خارجہ جماعت اسلامی عبدالغفارعزیز ، سیکرٹری جنرل جماعت اسلامی پنجاب نذیر احمد جنجوعہ و دیگر نے کی۔ ریلی اسمبلی ہال پہنچ کر بڑے جلسہ عام کی شکل اختیار کر گئی یہاںخطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر فرید احمد پراچہ نے کہاکہ وہ وقت دور نہیں جب کشمیری بھارت کے پنجہ ¿ استبداد سے آزاد ہو ں گے ۔ اقوام متحدہ اور عالمی برادری کشمیر پر بھارت کے غاصبانہ قبضہ کے خلاف جلد فیصلہ کرے اور کشمیریوں کو ان کا حق خود ارادیت دیا جائے ۔ انہوں نے کہاکہ مسئلہ کشمیر جنوبی ایشیا میں امن کے قیام میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے ۔ کشمیر میں مسلم اکثریت کو اقلیت میں بدلنے کے لیے بھارت ظالمانہ ہتھکنڈے آزما رہاہے ۔ بھارت کی آٹھ لاکھ فوج نے کشمیریوں کا جینا مشکل بنادیاہے ۔ انہوں نے کہاکہ بھارت نے ڈھونگ الیکشن کے ذریعے عالمی برادری کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کی کوشش کی مگر انتخابات کے بعد کی صورتحال نے بھارت کو کشمیرمیں گورنر راج نافذ کرنے پر مجبور کر دیا ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s