چائنہ اکنامک کوری ڈور منصوبہ پاکستان کی مستقل ترقی کے لیے شہ رگ کی حیثیت رکھتاہے ۔سراج الحق

چائنہ اکنامک کوری ڈور منصوبہ پاکستان کی مستقل ترقی کے لیے شہ رگ کی حیثیت رکھتاہے ۔ حکومت قومی ترقی کے اس بہترین منصوبہ میں کسی قسم کی تبدیلی سے باز رہے۔سراج الحق کی پشاور میں گیسٹ آور اور دوسرے پروگرامات میں گفتگو
pic sirajul haq
لاہور10فروری 2015
    امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق ے کہاہے کہ چائنہ اکنامک کوری ڈور منصوبہ پاکستان کی مستقل ترقی کے لیے شہ رگ کی حیثیت رکھتاہے ۔ حکومت قومی ترقی کے اس بہترین منصوبہ میں کسی قسم کی تبدیلی سے باز رہے۔ وفاقی حکومت نے کاشغر گوادر روٹ کی تبدیلی کااشارہ د ے کر حساس مسئلہ کھڑا کر دیاہے ۔وفاقی حکومت ، قومی قیادت اور خیبر پختونخوا حکومت کو اعتماد میں لے ، ایسا نہ ہو کہ پاکستان کے مستقبل کی ترقی کا یہ منصوبہ بھی اختلافات کی نذر ہو جائے۔کاشغر گوادر روڈ سڑک کے ساتھ ساتھ ریلوے ٹریک کا منصوبہ بھی ہے جبکہ سڑک اور ریلوے ٹریک کے دونوں طرف بہت بڑے انڈسٹریل زون کاقیام عمل میں آئے گا ۔ اس منصوبے سے خیبر پختونخوا، قبائلی علاقہ جات اور بالخصوص بلوچستان کی ترقی سمیت پورے پاکستان کی خوشحالی کے مواقع میسر آئیں گے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پشاور پریس کلب کے پروگرام گیسٹ آور اور ڈسٹرکٹ بار پشاورو دیگروفود  سےملاقاتوں میں  گفتگو کرتے ہوئے کیا۔
    سراج الحق نے کےاکہ یہ بدقسمتی ہے کہ چائینہ جیسی بڑی قوت کے صدر کے پاکستان کے پہلے دورہ کو متنازعہ اور موخر کیا گیا جبکہ چینی صدر نے ہندوستان کا دورہ طے شدہ شیڈول کے مطابق کیا تھا ۔ انہوں نے کہاکہ اب جبکہ دوسر ی بار چائنہ کے سربراہ کا دورہ پاکستان قریب آرہاہے تو چائینہ کوری ڈور منصوبے میں تبدیلی کی افواہیں پھیلائی جارہی ہیں جس سے پاکستان کی پارلیمانی و سیاسی جماعتیں تقسیم ہوتی جارہی ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ چائنہ کے ساتھ مستقبل میں تعلقات کو مضبوط بنانے کے لیے ضروری ہے کہ قومی سطح پر مکمل یکجہتی کا ثبوت اور چائنہ کو بہترین دوست کا پیغام دیا جائے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان اور چین کے دوستانہ تعلقات مثالی ہیں ان تعلقات کو آگے بڑھانے اور مزید مضبوط کرنے کے لیے ضروری ہے کہ ہر قسم کی افواہوں اور منفی پروپیگنڈا کا سدباب کیا جائے تاکہ حکومت اس سلسلہ میں دوٹوک اور واضح موقف اختیار کرے تاکہ لوگوں کے ذہنوں میں اٹھنے والے سوالات اور تحفظات کا ازالہ ہوسکے ۔
    دریں اثنا سراج الحق نے مرکز اسلامی پشاورمیں مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کہاہے کہ سانحہ بلدیہ 21ویں ترمیم کا امتحان ہے، وفاقی حکومت صلاحیت اورجرا ¿ت کا مظاہرہ کرتے ہوئے جے آئی ٹی رپورٹ کی روشنی میں انصاف کے مطابق کارروائی کرے جماعت اسلامی مرکزی حکومت کو ٹال مٹول نہیں کرنے دے گی۔
     سراج الحق نے کہاکہ12مئی کا واقعہ افسوناک سانحہ تھا اورکراچی کے سانحہ بلدیہ، وکلائ، صحافیوں اور حکیم سعید کا خون انصاف کا
مطالبہ کررہاہے، انہوں نے کہاکہ ملک سے دہشت گردی کا خاتمہ کیاجائے اور کسی مسلک یا مذہب سے دہشت گردی کو منسلک کرکے امتیازی
قانون بنانا درست نہیں ۔انہوں نے کہا کہ اسلام آباد سیاسی مصلحتوں کی بجائے شہداءکے خون سے انصاف کرے۔ ملک کے 18کروڑ عوام مطالبہ کررہے ہےں کہ حکومت سانحہ بلدیہ کو ایک ٹیسٹ کیس کے طور پرلے۔ انہوں نے کہاکہ سینٹ انتخابات میں حصہ لینے کا فیصلہ پارلیمانی بورڈکی مشاورت سے کیا جائےگا۔ انہوں نے کہاکہ جب تک ایم کیوایم کے متعلق جے آئی ٹی رپورٹ منطقی انجام کو نہیں پہنچتی اس وقت تک پیپلزپارٹی کا ایم کیوایم سے اتحاد مناسب نہیں ہے ۔انہوں نے کہاکہ دہشت گرد کا جس پارٹی، جماعت، سرکاری ، غیر سرکاری، مدرسے ، کالج سے تعلق ہو ، داڑھی اور غیر داڑھی والا ہواس کے خلاف کارروائی کی جائے۔
    سراج الحق نے کہاکہ حکومت کی کمزوری کی وجہ سے بین الاقوامی مارکیٹ میں پٹرولیم مصنوعات سستا ہونے کے باوجودعوام اس کے ثمرات سے محروم ہےں حکومت عوام کو ریلیف دینے کےلئے اقدامات کرے۔ انہوں نے کہاکہ حکومت کرپشن اور غیر ترقیاتی اخراجات کم کرکے عوام کو فائدہ پہنچائے۔ انہوں نے کہاکہ قبائل کومجرم سمجھنا اوران کے بارے میں منفی تاثر پاکستان کے ساتھ زیادتی ہے۔سابق صدر زرداری کے بعد مرکزی حکومت نے بھی قبائلی عوام کے معیار زندگی کو بلند کرنے کےلئے نئے قوانین نہیں بنائے ہیں جس کیوجہ سے قبائلی عوام کی زندگی میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ قبائلی علاقوں کا بجٹ ملک کے کسی بھی بڑے شہر سے کم ہے ،انہوں نے مطالبہ کیا کہ وفاق کوقبائلی علاقوں کا بجٹ 100بلین رکھناچاہئے جبکہ یہ بجٹ 18بلین روپے مختص کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ پنجاب اور سندھ میں قبائلی اور پختونخوا کے عوام کو تنگ کیاجارہاہے ،سیکورٹی فورسز ہرآدمی کومشکوک سمجھ کر گرفتاریوں سلسلہ بندکرے۔ انہوں نے کہاکہ بلدیاتی انتخابات پی ٹی آئی کے ساتھ مل کر لڑیں گے جبکہ صوبوں کو اختیار دیاہے کہ بلدیاتی انتخابات میں جس سے چاہیں اتحاد کریں ۔
     

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s