کارکنان پنجاب سندھ اور خیبر پختونخواہ میں بلدیاتی انتخابات کی تیاری شروع کردیں ۔سراج الحق

20150426_153534

پشاور26اپریل2015ء
    امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ کارکنان پنجاب سندھ اور خیبر پختونخواہ میں بلدیاتی انتخابات کی تیاری شروع کردیں ،بلدیاتی انتخابات جمہوریت کی پنیری ہوتے ہیں ،جمہوریت کو گراس روٹ لیول سے مضبوط بنانے کیلئے بلدیاتی انتخابات کا کردار انتہائی اہمیت رکھتا ہے ۔ملک میں جمہوریت کوفروغ دینے کیلئے عوام کو اپنا انتخابی رویہ بدلنا ہوگا۔کرپشن کے پروردہ اور لوٹ کھسوٹ کرنے والے بددیانت لوگوں سے نجات حاصل کرنے کیلئے اہل اور دیانت دار قیادت کا انتخاب ضروری ہے ۔کنٹونمنٹ انتخابات میں کامیاب ہونے والے جماعت اسلامی کے نمائندگان کوسیاست کو عبادت سمجھتے ہوئے عوام کی خدمت کیلئے دن رات ایک کرنا ہوگا۔ جماعت اسلامی کے مرکزی میڈیا سیل کے مطابق ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے ایک بیان میں ملک بھر کےکنٹونمنٹانتخابات میں کامیاب ہونے والے جماعت اسلامی اور اس کے حمایت یافتہ نمائندوں کومبارک باددیتے ہوئے کیا۔
    سراج الحق نے کہا کہ جب عوام کسی فردکو اپنا نمائندہ منتخب کرتے ہیں تو ان کے مسائل و مشکلات کے حل کی تمام تر ذمہ داری اس فرد کے کندھوں پر آجاتی ہے ،پاکستان میں عام طور پر کامیاب ہونے والے عوامی نمائندے اپنی اس ذمہ داری کا احساس کم ہی کرتے ہیں اورووٹ لینے کے بعد دوبارہ حلقے کا رخ نہیں کرتے ، عوام سارا سال اپنے نمائندوں کی شکل دیکھنے کو ترس جاتے ہیں ،یہ نام نہاد عوامی نمائندے لوگوں کے دکھ درد اور بوجھ بانٹنے کے بجائے اپنا بوجھ بھی عوام پر ڈال دیتے ہیں ،یہی وجہ ہے کہ گزشتہ 68سال میں ملک و قوم مسائل کی دلدل میں دھنستے اور بحرانوں کا شکار ہوتے گئے ،ملک میں غربت جہالت ،بے روز گاری اور بدامنی انڈے بچے دیتی رہی ،عوام غربت کی چکی میں پستے رہے اور یہ عوامی نمائندے قومی سرمائے سے اپنے محل اور بنگلے تعمیر کرکے عیش و عشرت کی زندگی میں مگن رہے ۔انہوں نے کہا کہ عوامی نمائندوں کو توعوام کی قابل رحم حالت دیکھ کرنیند نہیں آنی چاہئے۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے 2013کے انتخابات کے موقع پر عوام سے کئے گئے وعدوں اور اپنے انتخابی منشور پر عمل نہیں کیا ۔بجلی کی لوڈ شیڈنگ چھ ماہ میں ختم کردینے کے دعوے کرنے والے تین سال گزرنے کے باوجود لوڈشیڈنگ میں کوئی کمی نہیں دے سکے۔انہوں نے کہا کہ حکومت کو چاہئے کہ وہ جلد از جلد اپنے منشور پر عمل درآمد کا آغاز کردے اور بقیہ تین سالوں میں عوام کو زیادہ سے زیادہ ریلیف دینے کی کوشش کرے ۔
    سراج الحق نے کہا کہ کنٹونمنٹ انتخابات میں کامیاب ہونے والے نمائندوں کو اپنے گلی محلے کے مسائل کی طرف خصوصی توجہ دینی چاہئے ،تعلیم صحت اور روزگار کی فراہمی کیلئے مرکزی اور صوبائی حکومتوں پر دباﺅ بڑھانا چاہئے ،بے روزگاری کے جن کو قابو کرنے کیلئے گھریلو دستکاریوں اور چھوٹی صنعتوں کے قیام کیلئے اپنا کردار ادا کرنا چاہئے ۔انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی کے نمائندگان کو اپنی کارکردگی کے ذریعہ عوام کے دلوں میں جگہ بنانی چاہئے تاکہ آئندہ بلدیاتی انتخابات میں عوام جماعت اسلامی کے امیدواروں کا انتخاب کریں ۔سراج الحق نے کہا کہ جب تک ملک میں امانت و دیانت کے کلچر کو فروغ نہیں دیا جائے گا بدد یانت اور نااہل لوگ عوام کی گردنوں پر سوار رہیں گے ۔
    دریں اثنا سراج الحق نے صدر ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن خیبر پی کے فدا گل ایڈووکیٹ سے ان کے گھر پر ملاقات کی اور انہیں کامیابی پر مبارکباد دی اور پھولوں کا گلدستہ پیش کیا ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s