زراعت اور کسان کی ترقی ہی قومی ترقی و خوشحالی کی ضامن ہے ۔ملک میں کسان راج کا نفاذ ورلڈ بنک اور آئی ایم ایف سے آزادی کا سنگ میل ثابت ہوگا۔ظالمانہ استحصالی نظام نے قومی ترقی کے سارے خواب چکنا چور کردیئے ہیں ،ملکی ترقی و خود انحصاری کا دارومدار زراعت پر ہے ۔سینیٹر سراج الحق کا منصورہ میں کسان کنونشن سے خطاب 

pic (2)
لاہور2 مئی2015ئ
امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ زراعت اور کسان کی ترقی ہی قومی ترقی و خوشحالی کی ضامن ہے ۔ملک میں کسان راج کا نفاذ ورلڈ بنک اور آئی ایم ایف سے آزادی کا سنگ میل ثابت ہوگا۔ظالمانہ استحصالی نظام نے قومی ترقی کے سارے خواب چکنا چور کردیئے ہیں ،ملکی ترقی و خود انحصاری کا دارومدار زراعت پر ہے ۔ملک کی 70فیصد آبادی زراعت پیشہ ہے ۔جاپان جیسا پسماندہ ملک مخلص قیادت کی وجہ سے ترقی کے آسمان پر ہے جبکہ پاکستان کرپٹ اورلیٹرے حکمرانوں کے ہاتھوں پسماندگی اور غربت و افلاس کی تصویر بنا ہوا ہے ۔ اگر حکومتی گودام گندم سے بھرے ہوئے ہیں تو پھر تھر میں لوگ بھوک سے کیوں مر رہے ہیں۔ جماعت اسلامی ملک میں کسان راج تحریک کا آغاز کررہی ہے تاکہ ملک بھر کے کسانوں کو ساتھ لیکر کرپٹ و قابض اشرافیہ سے نجات حاصل کی جائے ۔عوام سانپوں کودودھ پلا کر اژدھا بنانے اور بار بار ڈسے جانے کا رویہ چھوڑ کر آزادی و خود مختاری کے تحفظ کیلئے جماعت اسلامی کا ساتھ دیں ۔ کسانوں کے تعاون سے پاکستان کو گرین اور کلین بنائیں گے۔ ان خیالات کاا ظہار انہوں نے کسان بور ڈ پاکستان کے زیر انتظام منصورہ آڈیٹوریم میں منعقدہ کسان کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔کسان کنونشن سے ارسلان خان خاکوانی اور رمضان روہاڑی نے بھی خطاب کیا ۔اس موقع پر نائب امیر جماعت اسلامی میاں محمد اسلم ،صدر کسان بورڈ پاکستان صادق خان خاکوانی ،نائب صدر سرفراز احمد خان بھی موجود تھے۔
سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ اب تک برسراقتدار رہنے والی سیاسی جماعتوں کے کارکنان بھی مظلوم ہیں جنہیں سال ہا سال تک سہانے مستقبل کے خواب دکھائے اور خوشحالی کی لوریاںسنائی گئیں مگران کی تنگ دستی اور عسرت دور ہوئی نہ انہیں وہ پاکستان ملا جس کے ان سے وعدے کیے گئے تھے ،انہوں نے کہا کہ ہم ان تمام کارکنوں کے دل کی آواز ہیں جنہوں نے ملک و قوم کی خوشحالی کیلئے قربانیاں دیں لیکن انہیں ان کی محنتوں کا صلہ نہیں مل سکا ۔انہوں نے کہا کہ کسان پورا سال محنت و مشقت کرتا ہے مگر جب فصل پک تیار ہوجاتی ہے تو وہ آڑھتیوں کے گوداموں میں پہنچ جاتی ہے ،حکومت ان کی جنس خریدنے کیلئے تیار نہیں ہوتی جس کی وجہ سے کسان کا مسلسل استحصال ہورہا ہے ،انہوں نے کہا کہ گزشتہ دنوں آنے والے طوفان باد و باراں اور تیز آندھی سے کھیتوں میں پڑی ہوئی گندم کو شدید نقصان پہنچا ہے ،جنوبی پنجاب اور خیبر پختونخواہ میں ایسا طوفان ایک بار پہلے بھی گندم کو شدید نقصان پہنچا چکا ہے ،لیکن وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی طرف سے کسانوں کی مدد کیلئے کوئی پیکیج اعلان نہیں کیا گیا ۔سراج الحق نے کہا کہ بھارت کی آبی دہشت گردی کو روکنے کیلئے بھی حکومت عالمی سطح پر آواز بلند نہیں کررہی اور مسلسل خاموشی اختیار کیے ہوئے ہے جس کی وجہ سے کسانوں کو فصلوں کی آبیاری کیلئے پانی نہیں ملتا اور قابل کاشت رقبے کے لیے کئی لاکھ ایکٹر پانی کی کمی ہوچکی ہے ،انہوں نے کہا کہ بھارت پاکستان کو بنجر بنانے کے ناپاک منصوبے پر عمل پیرا ہے اور ہماری حکومت بھارت سے آلو پیاز اور ٹماٹر کی تجارت کیلئے قومی مفادات کو قربان کر رہی ہے۔
سراج الحق نے کہا کہ جماعت اسلامی اقتدار میں آکر کسانوں کو بلاسود قرضے ،زرعی مشینری ،کھادوں بیج اور زرعی ادویات کی قیمتوں میں سبسڈی دے گی اور ڈیزل اور بجلی کی قیمتوں میں مناسب کمی کی جائے گی ۔انہوں نے کہا کہ بھارتی کسان اس لئے خوشحال ہے کہ انڈین حکومت کسانوں کو بجلی انتہائی کم قیمت پر دے رہی ہے ،کھیتوں سے منڈیوں تک پختہ سڑکیں ہیں اور منڈیوں میں ہمارے کسان کی طرح ان کے کاشتکاروں کا استحصال نہیں ہوتا ،انہوں نے کہا کہ زرعی اجناس کی بھارت سے تجارت کا مطلب پاکستانی صنعت کی طرح زراعت کو بھی تباہ کرنے کی سازش ہے ۔اگر ہمارے کسانوں کو وہی سہولتیں دستیاب ہوں تو پاکستانی کسان بھارت سے بھی بہتر پیدا وار دے سکتا ہے ۔سراج الحق نے کہا کہ کسان ملک میں نظام مصطفے ٰﷺ کے نفاذ کیلئے جماعت کا ساتھ دیں تو ہم ان سے وعدہ کرتے ہیں کہ ملک سے سودی نظام کا خاتمہ کرکے ملک کو آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک کی غلامی سے نجات دلادیں گے ۔انہوں نے کہا کہ جس دن پاکستان عالمی ساہوکاروں کے قبضہ سے آزاد ہوگیا اس کے تمام ادارے ترقی و خوشحالی کی سمت سفر شروع کردیں گے ۔اس موقع پر نائب صدر کسان بورڈ اور سابق ممبر فیڈرل بورڈ آف پاکستان سرفراز احمد خان کی نگرانی میں ایک کمیٹی تشکیل دی گئی جو غریب کسانوں کو بلاسود قرضے دلائے گی تاکہ وہ بہتر اور جدید طریقہ کاشت سے فائدہ اٹھائیں اور قومی پیداوار میں اضافہ کریں ۔ 

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s