پاکستان نے خطے میں جنگ کی بہت بھاری قیمت چکائی ہے ۔ سرحد کے دونوں پار اتنا اسلحہ استعمال ہوا ہے کہ جو ہیروشیما میں بھی استعمال نہیں ہواتھا ۔اس اسلحہ اور بارود کے اثرات آئندہ کئی صدیوں تک جاری رہیں گے ان سے متعدد نئی مہلک بیماریاں وجود میں آرہی ہیں ۔ سراج الحق سے منصورہ میں امریکی قونصلر جنرل اور مختلف وفود کی گفتگو

pic 3

لاہور22ستمبر 2015ء
    لاہور میں امریکی قونصلر جنرل Zachary Harkenrider نے آج منصورہ میں امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق سے ملاقات کی ۔ ملاقات میں دونوں ملکوں کے تعلقات اور خطے کی صورتحال پر تبادلہ ¿ خیال کیا گیا ۔ اس موقع پر ڈائریکٹر امور خارجہ جماعت اسلامی عبدالغفار عزیز بھی موجود تھے ۔
    سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ پاکستان نے خطے میں جنگ کی بہت بھاری قیمت چکائی ہے ۔ سرحد کے دونوں پار اتنا اسلحہ استعمال ہوا ہے کہ جو ہیروشیما میں بھی استعمال نہیں ہواتھا ۔اس اسلحہ اور بارود کے اثرات آئندہ کئی صدیوں تک جاری رہیں گے ان سے متعدد نئی مہلک بیماریاں وجود میں آرہی ہیں ۔ سراج الحق نے کہاکہ ہم امریکہ یا امریکی عوام کے نہیں امریکی پالیسیوں کے مخالف ہیں ۔ امریکی عوام کی بڑی تعداد بھی اپنی حکومت کی ان غلط پالیسیوں کے بارے ہمارا ہی موقف رکھتی ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ باہم گفت و شنید اور مذاکرات کے ذریعے تمام مسائل پر قابو پایا جاسکاہے ۔ انہو ں نے کہاکہ اس کے لیے سب کو انصاف ، برابری اور حقیقی جمہوریت کے اصول اپنانا ہوں گے ۔ انہوں نے کہاکہ حالیہ پشاور دھماکوں اور ملک میں گروہی و مسلکی اختلافات کو ہوا دینے کے پیچھے منظم ریاستی دہشتگردی کا ہاتھ ہے ۔
    دریں اثنا وائس آف کرسچئن انٹر نیشنل کے وفد نے ڈائریکٹر سیموئل پیارا کی قیادت میں امیر جماعت ا سلامی سینیٹر سراج الحق سے منصورہ میں ملاقات کی ۔ وفد میں این جی او کے صدر شیراز بھٹی اور کنٹری ڈائریکٹر عدیل راجہ شامل تھے ۔ وفد سے گفتگو کرتے ہوئے سراج الحق نے کہاکہ پاکستان کی تعمیرو ترقی میں مسیحی برادری کے نمایاں کردار کو سراہا جاناچاہیے ۔ انہوں نے کہاکہ ہم پاکستان میں بسنے والے غیر مسلموں کو اقلیت نہیں بلکہ پاکستانی برادری سمجھتے ہیں ۔انہو ں نے کہاکہ تمام پاکستانی شہریوں کے حقوق برابر ہیں ۔ پاکستان میں رہنے والی اقلیتوں کو مکمل مذہبی آزادی حاصل ہے ۔ہمارے دل میں اقلیتی بھائیوں کا بہت احترام ہے ۔ جماعت اسلامی کے اقلیتی ونگ میں مسیحی ، ہندو اور سکھ برادریوں کے نمایاں لوگ شامل ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ وائس آف کرسچئن انٹر نیشنل کی تعلیم ، صحت اور روزگار کے میدان میں بڑی خدمات ہیں ۔
     امیر جماعت اسلامی سراج الحق کے حالیہ دورہ بلوچستان کے موقع پر اپنے سینکڑوں ساتھیوں سمیت جماعت اسلامی میں شامل ہونے والے کوئٹہ کی تحصیل پنجپائی کے ناظم جمیل احمد مشوانی کی قیادت میں بلوچستان کے ایک وفد نے بھی منصورہ میںسراج الحق سے ملاقات کی اور صوبے کو درپیش مسائل کے بارے میں انہیں آگاہ کیا ۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہاکہ بلوچستان کی پسماندگی اور محرومیوں کو ختم کرنا حکومت کا فرض ہے۔ بلوچستان وسائل سے مالا مال اور رقبے کے لحاظ سے پاکستان کا بڑا صوبہ ہونے کے باوجود تعلیم ، صحت اور روزگار کے میدان میں بہت پیچھے ہے ۔ سینکڑوں دیہات تک رابطہ سڑکیں موجود نہیں اور دیہاتی بچوں کو تعلیم کے لیے میلوں دور پیدل جانا پڑتاہے ۔ انہوں نے کہاکہ حکومت ہر گاﺅں میں کم از کم پرائمری سکول کھولے اور نوجوانوں کو روزگار کی سہولتیں مہیا کرے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s