اقوام متحدہ امریکہ سمیت عالمی طاقتوں کے ہاتھوں کھلونا بنی ہوئی ہے جس کی وجہ سے عالمی سطح پر اس کی حیثیت متنازعہ بن چکی ہے ۔ کٹھ پتلی یواین اونے دنیا کو مایوس کیا ہے ،عالم اسلام کے حوالے سے یواین او کارکردگی صفر سے زیادہ نہیں ،جنگجو انڈیا کو کسی بھی صورت سلامتی کونسل کا رکن نہیں بنایا جانا چاہئے ،سلامتی کونسل کے ارکان میں اضافے کی بجائے یواین او کے پورے سٹرکچر کو تبدیل کرنے کی ضرورت ہے ۔سراج الحق کی منصورہ میں شوریٰ کی اسٹینڈنگ کمیٹیوں کے ارکان سے گفتگو

000

لاہوریکم اکتوبر2015ء    
    امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ امریکہ سمیت عالمی طاقتوں کے ہاتھوں کھلونا بنی ہوئی ہے جس کی وجہ سے عالمی سطح پر اس کی حیثیت متنازعہ بن چکی ہے ۔ کٹھ پتلی یواین اونے دنیا کو مایوس کیا ہے ،عالم اسلام کے حوالے سے یواین او کارکردگی صفر سے زیادہ نہیں ،جنگجو انڈیا کو کسی بھی صورت سلامتی کونسل کا رکن نہیں بنایا جانا چاہئے ،سلامتی کونسل کے ارکان میں اضافے کی بجائے یواین او کے پورے سٹرکچر کو تبدیل کرنے کی ضرورت ہے ۔مسئلہ کشمیر اور فلسطین اقوام متحدہ کے چارٹر پر سب سے پرانے مسائل ہیں جو 70سال سے حل طلب ہیں ،بھارت نے کشمیر اور اسرائیل نے فلسطین پر غاصبانہ قبضہ کررکھا ہے۔ نواز شریف نے جنرل اسمبلی میں مسئلہ کشمیر پر جرا ¿ت مندانہ موقف سے قومی امنگوں کی ترجمانی کی۔مرکزی اور صوبائی حکومتوں کو اپنی مدت پوری کرنی چاہئے۔عوام پسند نہیں کرتے کہ حکومتوں کو وقت سے پہلے ہی چلتا کردیا جائے۔قیام امن کیلئے حکومت اور ریاستی اداروں کو مل کر کام کرنا چاہئے۔حکومتوں کو مدت پوری نہ کرنے دی گئی تو قیام امن کی کوششوں کو نقصان پہنچے گا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے منصورہ میں مرکزی شوریٰ کی اسٹینڈنگ کمیٹیوں کے ارکان سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔
    سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ امریکہ اور طاقتور ممالک نے ہمیشہ یواین او کو اپنے مفادات کیلئے استعمال کیا،سلامتی کونسل کو محض طاقتور ممالک کا کلب نہیں ہونا چاہئے ۔عالمی امن کو یقینی بنانے کیلئے اقوام متحدہ کو اپنی حیثیت کو غیر متنازعہ اور با اعتماد بنانا پڑے گا۔انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ اپنے قیام سے اب تک دنیا کو اپنے کردار سے مطمئن نہیں کرسکی ۔اتنے طویل عرصہ سے یو این او محض ایک رپورٹنگ ایجنسی اور تماشائی کا کردار ادا کررہی ہے ۔جبکہ دنیا میں بڑی قوتیں چھوٹے ممالک پر ظلم و جبر کے پہاڑ توڑ رہی ہیں مظلوموں کو عدل و انصاف فراہم کرنا اور ظالم کو اس کے ظلم سے باز رکھنا یواین او کا فرض تھا جسے کسی بھی موقع پر پورا نہیں کیا گیا ۔انہوں نے کہا مجموعی طور پر اقوام متحدہ کی پالیسیاں وہی رہی ہیں جو امریکہ یاچند دیگر طاقتورممالک چاہتے ہےں ۔اسی لئے آج تک مسلمانوں کے مفادات کے تحفظ کیلئے اقوام متحدہ کچھ نہیں کرسکی ،انہوں نے کہا کہ کشمیر میں بھارت کی سات لاکھ فوج نے بندوق کی نوک پر کشمیری مسلمانوں کو غلام بنا رکھا ہے ،لاکھوں کشمیری اپنی آزادی اور خود مختاری کیلئے اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کرچکے ہیں اور لاکھوں بھارتی جیلو ں میں بدترین ریاستی ظلم و جبر کا شکار ہیں مگر اقوام متحدہ آج تک کشمیر کے متعلق اپنی قراردادوں پر عمل درآمد کروانے میں ناکام رہی ہے ۔ افغانستان کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے سراج الحق نے کہا کہ افغانستان میں امن دونوں ملکوں کی ضرورت ہے ،یہ مسلح جدوجہد کے ذریعہ اقتدار پر قبضہ کرنے کا نہیں بلکہ ڈائیلاگ کا زمانہ ہے ۔اس لئے فریقین کو خانہ جنگی کے بجائے باہمی گفت و شنید اور مذاکرات کے ذریعے مسئلے کا حل تلاش کرنا چاہئے اور انہوں نے کہا کہ افغانستان میں امن کیلئے بیرونی فوجوں کا افغانستان سے انخلاءضروری ہے ۔
    دریں اثناءامیر جماعت اسلامی سرا ج الحق نے اقوام متحدہ میں پہلی بار فلسطینی پرچم لہرائے جانے پر خوشی اور مسرت کا اظہار کرتے ہوئے فلسطینی مسلمانوں کو مبارکباد دی ہے اور اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ فلسطین کو اسرائیل کے غاصبانہ قبضہ سے آزادی دلا کر ایک مستقل رکن کی حیثیت دے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s