قبائلی عوام اپنا حق اور عزت مانگتے ہیں جسطرح کے حقوق اسلام آباد اور ملک کے دوسرے عوام کو حاصل ہیں قبائل کو بھی ملنے چاہیں قبائلیوں کا بھی ملکی وسائل پر اتنا ہی حق ہے جتنا کسی دوسرے کا قبائل اب کسی بھی صورت ایف سی آر کے کالے قانون کو برداشت کرنے کے لیے تیار نہیں ہے۔امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق

DSC_1449

اسلام آباد16نومبر2015ء
ملک کی نو بڑی سیاسی جماعتوں نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ فوری طور پر فاٹا سے ایف سی آر کے کالے قانون کو ختم کر کے قبائلی عوام کو اپنے مستقبل کے بارے میں فیصلہ کرنے کا حق دیا جائے قبائلی عوام پر کسی قسم کی تجویز مسلط نہیں کرنے دیں گے قبائلیوں کو ملک کے دوسرے عوام کی طرح حقوق دیے جائیں ۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ ن ، جماعت اسلامی، عوامی نیشنل پارٹی، پاکستان تحریک انصاف ، پاکستان پیپلز پارٹی ، نیشنل پارٹی ، مسلم لیگ ق، جمعیت علماء اسلام ف اور قومی وطن پارٹی کے رہنماؤں نے ڈی چوک اسلام آباد میں قبائل کے حقوق کے لیے نکالی گئی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ریلی میں قبائلی علاقوں سے آئے ہوئے عوام نے سینکڑوں کی تعداد میں شرکت کی ریلی کے شرکاء نے نامنظور نامنظور ایف سی آر نامنظور گو ایف سی آر گو اور قبائل کو حقوق دو کے نعرے لگائے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے کہا کہ میں قبائل کو اس کامیاب ریلی پر مبارکباد پیش کرتا ہوں قبائلی عوام کے مستقبل کا فیصلہ کسی اور نے نہیں بلکہ قبائلی علاقوں کے عوام نے کرنا ہے انہوں نے کہا کہ میں واضح کرنا چاہتا ہوں کہ کسی سیاسی جماعت کی کوئی تجویز نہیں ہے ہم صرف قبائلی عوام کی حمایت کرنا چاہتے ہیں کہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کریں سراج الحق نے کہا کہ قبائلی عوام اپنا حق اور عزت مانگتے ہیں جسطرح کے حقوق اسلام آباد اور ملک کے دوسرے عوام کو حاصل ہیں قبائل کو بھی ملنے چاہیں قبائلیوں کا بھی ملکی وسائل پر اتنا ہی حق ہے جتنا کسی دوسرے کا قبائل اب کسی بھی صورت ایف سی آر کے کالے قانون کو برداشت کرنے کے لیے تیار نہیں ہے قبائل کی نئی نسل اس قانون کے خلاف اٹھ کھڑی ہوئی ہے حکومت کوئی فیصلہ قبائل پر مسلط نہ کرے انہوں نے کہا کہ قبائلی اراکین پارلیمینٹ کی طر ف سے پارلیمینٹ میں جو بل پیش کیا گیا ہے جماعت اسلامی کے اراکین اسکی حمایت کریں گے انہوں نے کہا کہ میں قبائلی عوام سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ آپس میں تقسیم نہ ہوں کچھ عناصر ان کو آپس میں لڑوا کر تقسیم کرنا چاہتے ہیں تمام سیاسی جماعتوں کو وہی حل قبول ہو گا جو قبائلی عوام چاہیں گے قبائلی عوام کے بچے مزید چوکیداری کرنے کے لیے تیار نہیں ہیں ہم چاہتے ہیں کہ قبائلی عوام بھی باقی ملک کی طرح ترقی کرے قبائل کے حقوق کی جنگ ایک لمبی لڑائی ہے ہم نے جسطرح پاکستان کے لیے جنگ کی اسی طرح اپنے حقوق کے لیے بھی جنگ کریں گے عوامی نیشنل پارٹی کے سیکریٹری جنرل میاں افتخار حسین نے کہا کہ پختونوں کو جسطرح تقسیم کیا گیا ہے ہم اسکو نہیں مانتے ہم انگریزوں کی طرف سے کھینچی گئی اس لکیر کا خاتمہ چاہتے ہیں اور انگریز کے کالے قانون ایف سی آر کو نہ پہلے مانا نہ اب مانیں گے کچھ لوگ ہماری اس کوشش کے راستے میں روڑے اٹکا نا چاہتے ہیں کہ پختون ایک نہ ہوں جو پختونوں کے دشمن ہیں انہوں نے کہا ہم صدر وزیر اعظم اور پارلیمینٹ کو پیغام پہنچانا چاہتے ہیں کہ فاٹا اور خیبر پختونخوا کو جلد از جلد ایک کیا جائے جو پارٹیاں آج اس ریلی میں موجود نہیں ہیں وہ اس تحریک میں شامل ہوں یہ قومی مسئلہ ہے کسی ایک پارٹی کا سیاسی مسئلہ نہیں ہے پاکستان تحریک انصاف کے رکن قومی اسمبلی اسد عمر نے کہا کہ تمام سیاسی جماعتیں قبائلی عوام کے ساتھ ہیں ہم قبائل کو بااختیار دیکھنا چاہتے ہیں قبائل کے عوام کو پورا پاکستانی مانا جائے پورے پاکستان کے عوام ان کی جدوجہد میں ان کے ساتھ ہیں قومی وطن پارٹی کے سربراہ آفتاب احمد شیرپاؤ نے کہا ہے کہ آج کا دن ایک تاریخی دن ہے قبائل نے پاکستان کے لیے بے پناہ قربانیاں دی ہیں ان قربانیوں کی ملکی تاریخ میں کہیں مثال نہیں ملتی وقت آگیا ہے کہ فاٹا میں قوانین کو تبدیل کیا جائے اور عوام کی منشاء کے مطابق وہاں کا فیصلہ کیا جائے انہوں نے کہا کہ ہمارا مطالبہ ہے کہ قبائلی علاقے کو فوری طور پر خیبر پختونخوا میں ضم کر دیا جائے یہی وقت کا تقاضا ہے فاٹا اراکین پارلیمینٹ کے لیڈر شاہ جی گل نے کہا کہ قبائلیوں نے پاکستان کو بچایا تھا اور اسے بنانے کے لیے بے پناہ قربانیاں دی ہیں آج قبائل اپنے حقوق کے لیے ایک ہو چکے ہیں پاکستانی عوام ہمارا ساتھ دیں ہمیں ہمارا حق اور اختیار دیا جائے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s