میری دشمنی جہالت ،غربت اور کرپشن سے ہے ۔قوم پر جہالت ،غربت اور کرپشن مسلط کرنے والے کسی رعایت کے مستحق نہیں۔نوجوان پاکستان کو کرپشن فری بنانے کیلئے میرا ساتھ دیں۔ظالم سرمایہ دار قومی دولت لوٹ کر درجنوں کارخانوں کے مالک بن بیٹھے ہیں اور مزدور کا بیٹا آج بھی تعلیم صحت اور روز گار سے محروم ہے ۔سینیٹر سراج الحق کا کنونشن سینٹراسلام آباد میں جماعت اسلامی یوتھ ونگ کنونشن سے خطاب

JI 0

  لاہور27دسمبر2015ء
امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ میری دشمنی جہالت ،غربت اور کرپشن سے ہے ۔قوم پر جہالت ،غربت اور کرپشن مسلط کرنے والے کسی رعایت کے مستحق نہیں۔نوجوان پاکستان کو کرپشن فری بنانے کیلئے میرا ساتھ دیں۔ظالم سرمایہ دار قومی دولت لوٹ کر درجنوں کارخانوں کے مالک بن بیٹھے ہیں اور مزدور کا بیٹا آج بھی تعلیم صحت اور روز گار سے محروم ہے ۔قوم سے غداری کے عوض جاگیریں لینے والوں کی جاگیریں ضبط کرکے غریب کاشتکاروں اور کسانوں میں تقسیم کریں گے ۔ میرٹ کے قتل عام سے قوم کے ذہین نوجوان اعلیٰ تعلیم کے باوجودبے روز گار اور حکمرانوں کے نااہل شہزادے اعلیٰ عہدوں پر براجمان ہیں ۔جس کی جیب میں پاکستان کا شناختی کارڈ ہے وہ ہماری نظر میں وی آئی پی ہے ۔ملک سے اسٹیٹس کو ،اور وی آئی پی سسٹم کا خاتمہ ہماری جدوجہد کا مرکزی نقطہ ہے ۔جنوری میں کرپشن کے خلاف بڑی تحریک کا آغاز کریں گے ۔جماعت اسلامی کے مرکزی میڈیا سیل کے مطابق ان خیالات کا اظہار انہوں نے جماعت اسلامی یوتھ ونگ کے زیر اہتمام کنونشن سینٹراسلام آباد میں نوجوانوں کے بڑے کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔یوتھ کنونشن سے نائب امیر جماعت اسلامی میاں محمد اسلم اور صدر جماعت اسلامی یوتھ زبیر احمد گوندل نے بھی خطاب کیا ۔
سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ قوم کے اصل مجرم وہ حکمران ہیںجنہوں نے ملک و قوم کو آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک کے غلام بنایا ہے ۔ملکی اقتدار پر قابض رہنے والوں نے68سال میں پاکستان کو دونوں ہاتھوں سے لوٹا ہے ،ان کی کرپشن کے اربوں ڈالر بیرونی بنکوں میں پڑے ہیں اور میرے ملک کا نوجوان بیروز گاری کی چکی میں پس رہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ملت سے غداری کرکے انگریز سے جاگیریں حاصل کرنے والوں کی تیسری نسل عوام کی گردنوں پر سوار ہے ،انہیں صرف اپنے جاہ و جلال اور پروٹوکول سے غرض ہے ۔ وی آئی پی کلچرنے عام آدمی کی زندگی اجیرن کررکھی ہے ۔معصوم بچے سڑکوں پر دم توڑ رہے ہیں اور ملک کی ظالم اشرافیہ بے حسی کی آخری حد کراس کرچکی ہے ۔انہوں نے کہا کہ اسٹیٹس کو ،کی حامی قوتیں عوام کے خلاف متحد ہوچکی ہیں اور اپنے اسٹیٹس کو کے تحفظ کیلئے آخری حد تک جانے کو تیار ہیں مگر ہم نے بھی تہیہ کرلیا ہے کہ ان قوتوں کو مزید برداشت نہیں کریں گے اور جب تک پاکستان کو ان کے پنجہ استبداد سے آزاد نہیں کروالیتے چین سے نہیں بیٹھیں گے ۔انہوں نے کہا کہ حکمرانوں نے ایٹمی پاکستان کو گداگربنا کر قومی وقار کو صیہونی ساہو کاروں کے ہاتھ فروخت کردیا ہے ۔آج قوم کا بچہ بچہ مقروض ہے اور قرضے لینے والے عالی شان محلوں میں عیش و عشرت کی زندگی گزار رہے ہیں ۔
سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ پاکستان کی بنیاد میں لاکھوں شہداءکا خون ہے ۔ کلمہ کے نام پر اپنی زندگیوں کا نذرانہ پیش کرنے والوں کے خاندان پسماندگی اور بے چارگی کی زندگی کزارنے پر مجبور کردیئے گئے ہیں جبکہ قوم کو آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک کی غلامی کی زنجیروں میں جکڑنے والے اقتدار کے ایوانوں میں براجمان ہیں ۔انہوں نے کہا کہ جب تک اس ظلم و جبر کا خاتمہ نہیں ہوجاتا ملک ترقی نہیں کرسکتا ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کو اللہ تعالیٰ نے بیش بہا قدرتی خزانوں سے مالا مال کررکھا ہے مگر حکمران ہاتھ ہلانے والے نہیں ہاتھ پھیلانے والے ہیں اس لئے آج خو دانحصاری کا قابل عزت رستہ اپنانے کی بجائے قرضوںپر گزارہ کررہے ہیں ۔پاکستان پہلی اسلامی ایٹمی قوت ہونے کے باوجود اپنے وقار کا دفاع کرنے میں کامیاب نہیں ہوسکا جس کی وجہ سے دنیا بھر میں ہماری وقعت نہیں ۔  
Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s